اتحادیوں کے تحفظات دور کرنے کے لیے حکومت کی تین مذاکراتی کمیٹیوں کا مشترکہ اجلاس آج ہو گا۔ ذرائع کے مطابق حکومت کی تین مذاکراتی کمیٹیوں کا مشترکہ اجلاس اسلام آباد میں آج سہ پہر 3 بجے ہوگا جس میں پنجاب کی کمیٹی مسلم لیگ ق سے متعلق معاملات پر لائحہ عمل طے کرے گی۔ اجلاس میں گورنر پنجاب چوہدری سرور، وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار، وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود سمیت وفاقی وزراء پرویز خٹک، اسد عمر اور گورنر سندھ عمران اسماعیل بھی شریک ہوں گے۔ ان کے علاوہ فردوس شمیم نقوی، حلیم عادل شیخ، قاسم سوری اور میر خان محمد جمالی بھی اجلاس میں شریک ہوں گے۔ ذرائع کا بتانا ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے اتحادیوں سے بات چیت کے لیے 10 ارکان پر مشتمل تین کمیٹیاں تشکیل دی ہیں۔ مشترکہ اجلاس میں ایم کیو ایم، جی ڈی اے، مسلم لیگ ق، بی این پی اور دیگر اتحادی جماعتوں کے تحفظات دور کرنے پر بات ہو گی۔ واضح رہے کہ وفاقی حکومت کی اتحادی جماعتیں وعدے پورے نہ ہونے کے باعث ناراض ہیں جب کہ ایم کیو ایم پاکستان کے کنوینر خالد مقبول صدیقی نے وزارت سے بھی استعفیٰ دے دیا ہے۔ اتحادیوں سے وزیر دفاع پرویز خٹک اور جہانگیر ترین نے مذاکرات کیے تھے جس کے بعد معاملات درست سمت کی جانب گامزن تھے لیکن گزشتہ دنوں وزیراعظم عمران خان نے اتحادیوں سے مذاکرات کے لیے نئی کمیٹیاں تشکیل دیں جس پر معاملہ بگڑ گیا اور ق لیگ نے نئی مذاکراتی کمیٹی سے بات چیت سے انکار کر دیا تھا۔ https://urdu.geo.tv/latest/213743-